. ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال ہرنائی 12 سال بعد بھی مکمل فعال نہ ہوسکا - Today Pakistan
Home / بلوچستان / ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال ہرنائی 12 سال بعد بھی مکمل فعال نہ ہوسکا

ضلعی ہیڈ کوارٹر ہسپتال ہرنائی 12 سال بعد بھی مکمل فعال نہ ہوسکا

آپریشن تھیٹر موجود ہے لیکن سرجن، نشہ ڈاکٹر اور دیگر سٹاف نہیں آپریشن تھیٹر بھی غیر فعال ‘گائناکالوجسٹ،آئی،آرتھو پیڈک سرجن چائلڈ سپےشلسٹ کی تقرری ضروری
ہرنائی (نامہ نگار)ضلعی ہیڈکوارٹر ہسپتال ہرنائی میں سٹاف نہ ہونے کی برابر ہے بارہ سال میں بھی ہسپتال فعال نہ ہوسکا ۔2008 کو ہسپتال کو ضلعی ہیڈکوار کا درجہ ملا ہے لیکن سٹاف وہی تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال کاکام کررہا ہے بارہ سال میں صرف ایک میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کے سوا دیگر سٹاف ابتک تعینات نہیں ہے ہسپتال میں آپریشن تھیٹر موجود ہے لیکن سرجن، نشہ ڈاکٹر اور دیگر سٹاف نہیں ہے آپریشن تھیٹر غیر فعال ہے ہسپتال کو فعال بنانے کےلئے سرجن، سپسلشٹ، گائناکالوجسٹ،آئی،آرتھو پیڈک سرجن چائیلڈ سپسلشٹ ، انستھیزا /نشہ کی ڈاکٹر تعیناتی بے حد ضروری ہے ہسپتال میں جدید مشینری موجود ہے لیکن استعمال کرنے کےلئے ٹیکنکل سٹاف کی ضرورت ہے ہسپتال میں سٹاف نرس، نرسرز، پیرامیڈیکس سٹاف نہ ہونے کی برابر ہے ۔ٹیکنکل سٹاف کے علاوہ خاکروب چوکیدار مالی کوک سیکورٹی گارڈ ڈرائیورز کی اسامیاں خالی ہے ضلع ہرنائی معدنیاتی علاقہ ہے خصوصا ہزاروں کوئل مائنز ہے کوئل مائنز چالیس ہزار سے زائد لیبر کام کررہا ہے اور ریسکےو سنٹر بھی موجود نہیں روزانہ مائنز میں حادثات ہوتے ہے لیکن جدید طبی سہولتوں کی فقدان کی وجہ سے اکثر زخمی جان کی بازی ہار جاتے ہے۔ جبکہ ڈپٹی کمشنر عظیم جان دمڑ کا کہنا ہے کہ وزیراعلی نے رپورٹ طلب کرلیا ہے جلد ضلعی ہیڈکوارٹر فعال ہوگا ۔ وزیراعلی کو ہسپتال میں ڈاکٹرز اور سٹاف کی تعیناتی سمیت تمام جدید طبی آلات کی فراہمی کی رپورٹ ارسال کرونگا ضلعی ہیڈکوارٹر ہسپتال کو تمام تر سہولتوں سے آراستہ کرینگے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے