. وفاقی نوکریوں اور تعلیمی اداروںمیں بلوچستان کا حصہ بڑھایا جائے‘ضیاءاللہ لانگو - Today Pakistan
Home / بلوچستان / وفاقی نوکریوں اور تعلیمی اداروںمیں بلوچستان کا حصہ بڑھایا جائے‘ضیاءاللہ لانگو

وفاقی نوکریوں اور تعلیمی اداروںمیں بلوچستان کا حصہ بڑھایا جائے‘ضیاءاللہ لانگو

صوبائی وزیر داخلہ میر ضیاءاللہ لانگو نے گزشتہ روز وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی، وفاقی وزیر برائے دفاعی پیداوار زبیدہ جلال، وفاقی وزیر برائے توانائی عمر ایوب خان اور چیئرمین این ڈی ایم اے لیفٹنٹ عمر محمود حیات سے علیحدہ علیحدہ ملاقاتیں کیں بلوچستان کی مجموعی سیاسی صورتحال اور خشک سالی پر تبادلہ خیال کیا – چیئرمین سینیٹ محمد صادق سنجرانی سے بات چیت کرتے ہوئے صوبائی وزیر نے کہا کہ بلوچستان کے نوجوانوں کو اعلیٰ تعلیم اور نوکریوں کی فراہمی کے لئے نمایاں کردار ادا ادا کریں – وفاقی نوکریوں اور تعلیمی اداروںمیں بلوچستان کا حصہ بڑھایا جائے تا کہ تعلیم یافتہ بے روزگار نوجوانوں میں بڑھتی ہوئی بے چینی کو کم کیا جا سکے – وفاقی وزیر دفاعی پیداوار زبیدہ جلال سے ملاقات کے موقع پر صوبائی وزیر نے کہا کہ بلوچستان میں تمام سیکورٹی فورسز تندہی اور دیانت داری سے اپنے فرائض انجام دے رہے ہیں دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پولیس، لیویز اور دیگر سیکیورٹی اداروں کا کردار قابل ستائش اور اہمیت کا حامل ہے، انہوں نے وفاقی وزیر سے کہا کہ لیویز فورس کو جدید خطوط پر استوار کرنے کے لیے وہ اپنا کردار ادا کرتے ہوئے لیویز فورس کو دور حاضر سے ہم آہنگ بنانے کے لیے جدید ہتھیار و دیگر سازوسامان فراہم کیئے جائیں تا کہ امن و امان اور ملک کے استحکام کے لئے ان کے پیشہ وارانہ صلاحیتوں کو مزید بہتر بنایا جاسکے – وفاقی وزیر دفاعی پیداوار زبیدہ جلال نے صوبائی وزیر کو یقین دلایا کہ وہ پولیس اور لیویز فورس کو جدید ساز و سامان کی فراہمی اور ان کے پیشہ وارانہ صلاحیتوں کو بہتر بنانے کے لئے اپنا بھرپور کردار ادا کریں گے – دریں اثناءصوبائی وزیر نے وفاقی وزیر توانائی سے بھی ملاقات کی اور بلوچستان کو درپیش لوڈشیڈنگ کے اور بجلی شارٹ فال کی وجہ سے زراعت کو در پیش نقصانات سے آگاہ کیا- صوبائی وزیر نے کہا کہ بلوچستان میں زیر زمین پانی کی سطح گرتی جا رہی ہے جسکی وجہ سے زرعی شعبے کو مشکلات درپیش ہے – انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے دیہی اور شہری علاقوں میں لوڈشیڈنگ کم کیا جائے- چیئرمین این ڈی ایم اے لیفٹنٹ جنرل عمر محمود حیات سے ملاقات کے دوران صوبائی وزیر نے کہا کہ بلوچستان خشک سالی کے شدید لپیٹ میں آ چکا ہے صوبائی حکومت اور محکمہ پی ڈی ایم اے متاثرہ علاقوں کی امداد اور بحالی کے لئے اپنے تمام وسائل بروئے کار لا رہے ہیں لیکن وسائل کی کمی کی وجہ سے خشک سالی سے متاثرہ علاقوں کی امداد اور بحالی کا کام متاثر ہوا ہے – صوبائی وزیر نے زور دیتے ہوئے مطالبہ کیا کہ ان علاقوں میں اگر جنگی بنیادوں پر بحالی و امداد کے سلسلہ میں اگر تیزی نا لائی گئی تو انسانی المیہ جنم لے سکتا ہے، ان علاقوں سے علاقہ مکینوں کی نقل مکانی، بچوں میں غزائی قلت، مال مویشیوں کو بیماریوں اور مرنے سے روکنے کے لیے ضروری ہے کہ امدادی کارروائیوں کے سلسلے کو تیز کیا جائے – چیئرمین این ڈی ایم اے نے صوبائی وزیر کو بلوچستان میں خشک سالی کے متاثرین کی بحالی و امداد کیلئے اضافی وسائل کی فراہمی کی یقین دہانی کرائی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے