وعدہ کرچکا ہوں، مدت پر عہدہ چھوڑ دونگا،آرمی چیف باجوہ

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ  نے ایک بار پھر واضح کرتے ہوئے کہا ہے کہ وعدے کے مطابق اپنی مدت پر عہدہ چھوڑ دونگا۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ فوج سیاست سے دور ہے اور رہے گی۔

ایک ہفتے کے طویل دورہ امریکا پر موجود پاکستان کے سپہ سالار آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے منگل 4 اکتوبر کو واشنگٹن میں پاکستانی سفارت خانے میں ظہرانے کے موقع پر غیر رسمی گفتگو کی۔

چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے قوم کو یقین دہانی کرائی ہے کہ مسلح افواج نے خود کو سیاست سے دور کر لیا ہے اور اسی طرح رہنا چاہتی ہیں۔ پہلے بھی وعدہ کر چکا ہوں کہ مدت مکمل ہونے پر عہدہ چھوڑ دوں گا۔

تقریب میں شریک افراد کے مطابق جنرل قمر جاوید باجوہ نے ظہرانے سے پہلے اجتماع سے خطاب کیا جس کے بعد مہمانوں سے گفتگو کرتے ہوئے غیر رسمی بات چیت بھی کی۔

آرمی چیف نے دو ماہ میں اپنی دوسری تین سالہ مدت پوری ہونے پر سبکدوش ہونے کے اپنے عہد کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے وعدے کے مطابق عمل کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی لاغر معیشت کو بحال کرنا معاشرے کے تمام طبقات کی اولین ترجیح ہونی چاہیے، مضبوط معیشت کے بغیر قوم اپنے اہداف حاصل نہیں کر سکے گی۔

پاکستانی سفارت کاروں کی ایک بڑی تعداد پر مشتمل سامعین سے اپنے خطاب میں ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ مضبوط معیشت کے بغیر کوئی سفارت کاری نہیں ہو سکتی۔

پاکستان میں آنے والے حالیہ سیلاب پر گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ سیلاب زدگان کی بحالی میں عالمی شراکت داروں کی مدد ناگزیر ہوگی۔

ظہرانے کے بعد آرمی چیف امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن سے ملاقات کے لیے پینٹاگون گئے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں